لالو حامیوں نے پٹنہ کی سڑکوں پر مچایا ادھم، بی جے پی دفتر پر کیا حملہ

پٹنہ: راشٹریہ جنتا دل (آر جے ڈی) کے سربراہ لالو پرساد یادو کے ٹھکانوں پر منگل کو پڑے محکمہ انکم ٹیکس کے چھاپوں کے بعد سیاست ابتدائی ہوتا ہے. بدھ (17 مئی) کو پٹنہ میں راشٹریہ جنتا دل کارکنوں نے بھارتیہ جنتا پارٹی (بی جے پی) دفتر کے باہر ہنگامہ اور توڑ پھوڑ کی.
کارکنوں نے وہاں بی جے پی لیڈر سشیل مودی کے خلاف جم کر نعرے بازی کی. ہنگامے کے دوران آر جے ڈی کے کارکنوں نے وہاں کھڑی گاڑیوں میں بھی توڑ پھوڑ کی.
اس دوران بی جے پی اور آر جے ڈی کارکنوں میں پتھر بازی بھی ہوئی. آر جے ڈی کے کئی کارکن پولیس سے بھی جا بھڑے. بتایا جا رہا ہے کہ کارکردگی کے دوران ان کارکنوں کی تعداد سینکڑوں میں تھی.
بي جےپيکا کہنا ہے مایوس ہیں لالو حامی
آر جے ڈی کے کارکنوں کی کارکردگی پر بہار بی جے پی کے رہنما منگل پانڈے نے کہا کہ ‘لالو کے خلاف بدعنوانی کے مقدمات میں کارروائی ہو رہی ہے. اس سے لالو کے حامی مایوس ہیں. مایوسی میں وہ پارٹی کے دفتر کے باہر مظاہرہ کر رہے ہیں.
یادو خاندان پر سشیل مودی کر رہے تھے وار
بتا دیں کہ منگل کو انکم ٹیکس محکمہ نے لالو یادو سے منسلک دہلی این سی آر میں 22 ٹھکانوں پر چھپےماري کی تھی. محکمہ انکم ٹیکس نے 1،000 کروڑ روپے کے گمنام پراپرٹی صورت میں یہ چھاپے مارے تھے. قابل ذکر ہے کہ بی جے پی لیڈر سشیل مودی گمنام پراپرٹی معاملے میں گزشتہ کئی ہفتوں سے لالو یادو اور ان کے خاندان کے خلاف انکشافات کرتے آ رہے تھے.

Leave a Comment

Copyright © Dailyaag - All Rights Reserved

Scroll to top